نیویارک : اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی نے بھارت کی مخالفت کے باوجود پاکستان کی جانب سے پیش کی گئی تین قرار دادیں منظور کرلی ہیں۔ یہ قراردادیں ہتھیاروں کا سد باب کرنے والی کمیٹی میں پیش کی گئی تھیں جو بھاری اکثریت سے منظور ہوئی ہیں۔ خطے میں روایتی ہتھیاروں کی روک تھام سے متعلق قرارداد 189 ممالک کی حمایت سے منظور ہوئی۔پاکستان نے روایتی اور غیر روایتی اسلحے کی روک تھام، خطے اور علاقائی سطح پر ہتھیاروں کے سدباب اور اس تناظر میں اعتماد کو فروغ دینے والے اقدامات سے متعلق قرار دادیں پیش کی تھیں ۔پاکستان کی قرار دادوں میں خطے میں ہتھیاروں کی دوڑ ختم کرنے پر زور دیا گیا ہے اور کہا گیا ہے کہ عالمی امن کی کوششوں کی کامیابی کیلئے ہتھیاروں کی دوڑ روکنا ناگزیر ہے۔اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ڈاکٹر ملیحہ لودھی نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ ہتھیاروں کے سدباب کے لیے پاکستان کی قراردادیں عالمی کوششوں کو مزید فروغ دیں گی۔ قراردادوں کا بھاری اکثریت سے پاس ہونا اس بات کا ثبوت ہے کہ عالمی برادری پاکستانی موقف کی حمایت کرتی ہے۔