عمرکوٹ : چیف سیکریٹری سندھ سید ممتاز علی شاہ کی خصوصی ہدایات پرضلع عمرکوٹ کی جاری ترقیاتی اسکیموں کا تفصیلی جائیزہ لینے کے لیے ڈپٹی کمشنر عمرکوٹ ندیم الرحمان میمن کی زیر صدارت ڈپٹی کمشنر آفیس کے دربار ہال میں اجلاس منعقد کیا گیا ، اس موقع پر ڈپٹی کمشنر عمرکوٹ ندیم الرحمان میمن نے ضلع عمرکوٹ کی اے ڈی پی کی 12 جاری ترقیاتی اسکیموں کی مختلف محکموں کے ایکسی این اور انجنئیر سے بریفنگ لی، انہوں نے تمام انجنئیرز کو ہدایات دیتے ہوئے کہا کہ جو اسکیمیں مکمل کی گی ہیں ان کی تفصیلی رپورٹ دی جائے اور جن پر کام جاری ہے انہیں جلد پورا کیاجائے ۔ اس موقع پر ایکسی این بلڈنگ میرپورخاص میر احسان ٹالپر نے بتایا کہ ضلع عمرکوٹ میں اے ڈی پی کی اسکیمیں نمبر1032,1034,1036,1037,1046, مکمل ہو چکی ہیں اور انہیں منسلک محکموں کے حوالے بھی کر دیا گیا ہے جبکہ دیگر اسکیموں پر کام تیزی سے جاری ہے ، اس موقع پر ڈپٹی کمشنر نے ہدایت دیتے ہوئے کہا کہ کیٹل کالونی عمرکوٹ کی اسکیم کو جلد سے جلد پانی کی لائین فراہم کی جائے اور اس کے لیے مونسپل کمیٹی عمرکوٹ اور محکمہ پبلک ہیلتھ انجنئیرنگ مل کر حکمت عملی بنائیں ، اس موقع پر ڈسٹرکٹ فوڈ کنٹرولر امجد احمد میمن نے بتایا کہ محکمہ فوڈ کی جانب سے گندم اسٹاک کرنے والے پلیٹ فارم کی اسکمیں منظور کی گی ہیں پر ان پر ابھی تک کام شروع نہیں ہو سکا ہے کیونکہ فوڈ گودام ڈورونارو میں رکھی گندم کی بوریوں کی جو زمین ہے وہ روینیو نقشے میں موجود نہیں ہے اس کے لیے انتظامات کئے جا رہے ہیں ۔ اس موقع پر ڈپٹی کمشنر نے محکمہ ایجوکیشن ورکس کے اسسٹنٹ انجنئیر کو ہدایت دی کہ ضلع کی67 زبون حال اسکولوں کی عمارتوں کو ایم اینڈ آر کی بجٹ میں شامل کیا جائے ، اجلاس میں یہ بھی فیصلہ کیا گیا کہ کمیونیٹی ڈولپمینٹ اسکیموں کی مد میں مکمل رقم جاری کی گی ہے پر انجنئیرز او ر ٹھیکیدار وں کی غفلت کی وجہ سے کام مکمل نہیں ہو سکا ہے ان کے خلاف انکوائری کروا ئی جائے گی اور محکمہ اینٹی کرپشن سندھ میں ریفرینس بھی دائر کیا جائے گا، اس موقع پر اجلاس میں ایکسی این ہائی ویز امتیاز علی میمن، اسسٹنٹ ایکسی این پراویشنل ہائی ویز جگدیش کمار ، ایس ڈی او بلڈنگ عبدالغنی، اسسٹنٹ کمشنر عمرکوٹ جھامن داس سونی ، ڈی او لائیو اسٹاک ڈاکٹر گھینش کھتری ، مختیارکار عمرکوٹ لیاقت علی راجپوت اور دیگر آفسران نے شرکت کی ۔