11

ملک بھر میں کورونا مریضوں کی تعداد 338ہوگئی، مردان میں لاک ڈاؤن

کراچی: گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران خیبر پختونخوا کے مزید 15 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی ہے جب کہ ایک مریض کی ہلاکت کے بعد مردان کی یونین کونسل منگا میں لاک ڈاؤن کردیا گیا ہے۔دنیا بھر کی طرح پاکستان میں بھی کورونا وائرس کی تباہ کاریاں جاری ہیں، اب تک ملک بھر میں اس وائرس سے 2 افراد کے جاں بحق ہونے کی تصدیق کی جاچکی ہے۔ سندھ میں کورونا وائرس کے سب سے زیادہ 211 کیسزرپورٹ ہوئے ہیں، خیبر پختونخوا میں کورونا مریضوں کی تعداد 32 ہوگئی۔ پنجاب میں 33، بلوچستان میں 45، اسلام آباد میں 5، گلگت بلتستان میں 11 اور آزاد کشمیر میں ایک مریض زیر علاج ہے۔محکمہ ریلیف خیبر پختونخوا کے مطابق کرم میں 5، ڈیرہ اسماعیل خان اور مردان سے 3،3 جب کہ لوئر دیر، مالاکانڈ ، پشاور اور ہری پور سے ایک ایک مریض میں کورونا کی تشخیص ہوئی ہے۔ تمام متاثرہ افراد کو ڈیرہ اسماعیل خان کے درہ زندہ آئسولیشن وارڈ میں رکھا گیا ہے، محکمہ ریلیف خیبر پختونخوا نے متعلقہ ڈپٹی کمشنرز کو ان کے پتے پر صوبائی حکومت کی جانب سے فوڈ پیکیج بھجوانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ  ضلعی انتظامیہ، محکمہ صحت اور پولیس اہلکار کوارٹائن کرنے والے مقامات پر عوام کو بے جا ہراساں نہ کریں۔ جس کے بعد خیبر پختونخوا میں کورونا مریضوں کی تعداد 32 ہوگئی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں