میانوالی قریشیاں(محمد افضل خان )گانگا ادبی اکیڈمی پاکستان کے چیئرمین وکالم نگار جام ایم ڈی گانگا سے 21مارچ شاعری کے عالمی دن کے حوالے سے عوامی شاعر رفیق ساحل اور فلم ڈائریکٹر جام مشیر عاصی کی قیادت میں شاعروں اور فنکاروں کی ملاقات. جام ایم ڈی گانگا نے کہا کہ دنیا کرونا وائرس وباء کی زد میں ہے.معاشرے کے تمام طبقات کو سنجیدگی کے ساتھ حفاظتی تدابیر اختیار کرنی چاہئیں. شعراء کرام اپنے کلام و شاعری کے ذریعے آگاہی اور تدابیری مہم میں اپنا کردار ادا کرنا چاہئیے. فنکار چھوٹے چھوٹے بامقصد خاکے بنا کر اپنے وسیب اور ملک کے عوام کو حالات کی سنگینی سے آگاہ کرتے ہوئے دعا دوا، احتیاط تدابیر اختیار کا پیغام پہنچائیں. کرونا ایک عذاب ہے تو ہمیں اپنے رب سے استغفارکرتے ہوئے پناہ مانگنی چاہئیے. کرونا ایک وباء اور بیماری ہے تو ہمیں اپنے نبی کریم کے فرمان پر عمل کرتے ہوئےتدابیر کے ساتھ احتیاط و علاج کرنا چاہئیے. بے شک اللہ ہی عذاب سے نجات اور بیماریوں سے چھٹکارا دینے والا ہے. اس موقع پر رفیق ساحل نے بتایا کہ سرائیکی وسیب کا شاعر بڑا درد مند اور باشعور ہے. بہت سارے سرائیکی شاعروں نے اچھے انداز میں اپنا پیغام دینا شروع کر رکھا ہے.جام مشیر عاصی نے بتایا کہ خاکے بنانے والے سرائیکی فنکاروں نے سب سے پہلے کرونا پر اصلاحی و آگاہی خاکہ تیار کیا جو ٹی پی گولڈ کی جانب سے ریلیز بھی کر دیا گیا ہے. ملاقات کرنے والے فنکاروں میں فلمسٹار بختاور اینجل خان، توفیق چودھری،عابد بلوچ، حمید ثاقب، محمد اشرف وغیرہ موجود تھے.